مہنگا فون خرید کر نہ دینے پر لڑکی کی والدین کو چلتے پنکھے میں ہاتھ ڈالنے کی دھمکی

والدین کی جانب سے مہنگا اسمارٹ فون خرید کر نہ دینے پر لڑکی نے چلتے پنکھے میں ہاتھ ڈالنے کی دھمکی دے دی۔

بھارت میں والدین کی جانب سے مہنگا اسمارٹ فون خرید کر نہ دینے پر 18 سالہ لڑکی نے چھت پر چلتے ہوئے پنکھے میں اپنا ہاتھ ڈالنے کی دھمکی دے دی۔ بھارتی میڈیا کے مطابق لڑکی نے اپنے والدین سے مہنگے اسمارٹ فون کے نئے ماڈل کی فرمائش کی لیکن والدین کی جانب سے انکار پر اس نے دھمکی دی کہ وہ خود کو نقصان پہنچائے گی۔

لڑکی فرسٹ ایئر میڈیکل کی طالبہ ہے جبکہ والدین وکیل ہیں اور ان کے معاشی حالات بھی بہتر ہیں۔ خاندان کے کچھ افراد بیرون ملک ہیں اور وہ لڑکی کو کوئی نہ کوئی تحائف بھیجتے رہتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

بھارت میں جسم فروشی کو قانونی حیثیت دے دی گئی

والدین کا کہنا ہے کہ ان تحائف نے بیٹی کو خراب کر دیا اور اسے ضدی بنا دیا ہے۔ اس کے پاس پہلے سے اچھا فون تھا اس لیے ہم نے اسے نیا خرید کر دینے سے انکار کردیا۔ جس پر اس نے پہلے غصے میں چیزوں کو توڑنا اور چیخنا چلانا شروع کر دیا۔ اور اس کے بعد اسٹول پر کھڑے ہو کر پنکھے میں ہاتھ ڈال کر خود کو نقصان پہنچانے کی دھمکی دی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق والدین نے 181 ہیلپ لائن پر کال کی جس کے بعد ایک کانسٹیبل اور مشکل حالات میں مشاورت اور رہنمائی کرنے والے اہلکار رہائش گاہ پہنچے اور آخر کار آدھے گھنٹے کے بعد لڑکی اسٹول سے نیچے آئی۔